Engineer Mirza Ali

Ghulam Ahmad Qadiyani YAZEEDI ??? Qadiyani PUBLIC ko Dawat-e-HAQ ! ! ! (Engineer Muhammad Ali Mirza)

Ghulam Ahmad Qadiyani YAZEEDI ??? Qadiyani PUBLIC ko Dawat-e-HAQ ! ! ! (Engineer Muhammad Ali Mirza)

Today topic is :Ghulam Ahmad Qadiyani YAZEEDI ??? Qadiyani PUBLIC ko Dawat-e-HAQ ! ! ! (Engineer Muhammad Ali Mirza).

Video Information
Title Ghulam Ahmad Qadiyani YAZEEDI ??? Qadiyani PUBLIC ko Dawat-e-HAQ ! ! ! (Engineer Muhammad Ali Mirza)
Video Id fQ-Fvd-cjPQ
Video Source https://www.youtube.com/watch?v=fQ-Fvd-cjPQ
Video Image 1679226552 314 hqdefault
Video Views 82906
Video Published 2019-08-26 20:09:29
Video Rating 5.00
Video Duration 00:21:33
Video Author Engineer Muhammad Ali Mirza – Official Channel
Video Likes 2392
Video Dislikes
Video Tags #Ghulam #Ahmad #Qadiyani #YAZEEDI #Qadiyani #PUBLIC #DawateHAQ #Engineer #Muhammad #Ali #Mirza
Download Click here

Engineer Muhammad Mirza Ali


Mirza Ali

Muhammad Ali Mirza was born on 4 October 1977 in Jhelum, a city in Punjab, Pakistan. He is a 19th grade mechanical engineer in a government department.

Muhammad Ali Mirza, commonly known as Engineer Muhammad Ali Mirza is a Pakistani Islamic scholar and commentator.

Is engineer Muhammad Ali Mirza Sunni or Shia?

engineer mirza ali

Engineer Muahmmad Ali Mirza is Sunni, Known "Mulim ilmi kitabi".

How do I contact engineer Muhammad Ali?

Engineer Muhammad Ali Mirza

You can call on this phone number, which is "03215900162", and discuss your problem with them.

Who is Mirza Ali of Pakistan?

muhammad mirza ali

Muhammad Ali Mirza, commonly known as Engineer Muhammad Ali Mirza is a Pakistani Islamic scholar and commentator.

What is the age of engineer Muhammad Ali Mirza?

mirza ali

(Engineer Muhammad Ali Mirza) Born: October 4, 1977 (age 46 years) Place: Jhelum Country: Pakistan

What is religion of Engineer Muhammad Ali Mirza?

Engineer Muhammad Ali Mirza is Muslim by religion. He is also known as muslim ilmi kitabi. He says " I,m Muslim Ilmi Kitabi".

What is the Education of Engineer Muhammad Ali Mirza?

He is an engineer by profession. And also a "Pakistani Islamic Scholar". He studied in "University of Engineering and Technology, Taxila".

Engineer Muhammad Ali Mirza

Muhammad Ali Mirza, commonly known as Engineer Muhammad Ali Mirza is a Pakistani Islamic scholar and commentator. Engineer Muhammad Ali Mirza is an acclaimed Islamic scholar whose passion for learning and understanding the Quran and Hadith has earned him a distinguished place in the Muslim world.

21 Comments

  1. Ref. No. 1 : QADIYANION ko Dawat-e-ISLAH ??? Khatam-e-NUBOWWAT ﷺ peh Best BOOK ??? (Engineer Muhammad Ali Mirza) : https://www.youtube.com/watch?v=f0vbZxr0vF0&t=1158s
    Ref. No. 2 : QADIYANI kewn ISLAM qubool NAHIN ker letay ??? A Big TRUTH Revealed By Engineer Muhammad Ali Mirza ! : https://www.youtube.com/watch?v=WPHxD0U_2KI&t=196s
    Ref. No. 3 : QADIYANION sey Lain Dain kerna ??? 3-Categories of Non-MUSLIMS ??? (By Engineer Muhammad Ali Mirza) : https://www.youtube.com/watch?v=Jto-pwDTzX4&t=428s

  2. مرزائی امت مسلمہ کیوں نہیں ہیں؟
    ذیل میں مرزا صاحب کے کچھ عقائد اور فضائل ہیں۔ جن پر غور فکر کر کے مسئلہ کو سمجھنا آسان ہو جائے گا ۔
    1.مبشرا برسول یاتی من بعدی اسمہ احمد ۔ اس کا مصداق میں(مرزا) ہوں۔ (ازالہ اوہام طبع اول ص 673 ،خزائن ج3 ص463.)
    2.مسیح موعود میں ہوں۔(ازالہ اوہام طبع اول ص 665, خزائن ج3ص459)
    3.میں مہدی مسعود اور بعض نبیوں سے افضل ہوں۔(معیار الاخیار ص11،مجموعہ اشتہارات ج3ص278)
    4. میرا قدم اس منارے پر جہاں کل بلندیاں ختم ہو چکی۔(خطبہ الہاشمیہ ص70, خزائن ج16ص70)
    5.میں مسلمانوں کے لیے مسیح مہدی اور ہندوؤں کے لیے کرشن ہوں۔(لیکچر سیالکوٹ ص33 خزائن ج18ص328)
    6.میں امام حسین سے افضل ہوں۔(دافع البلاء ص13, خزائن ج18 ص332)
    7.یسوع مسیح کی تین دادیاں اور تین نانیاں زنا کار تھیں۔(ضمیمہ انجام آتھم حاشیہ ص 7 خزائن ج11حاشیہص291)
    8.یسوع مسیح کو جھوٹ بولنے کی عادت تھی۔(ضمیمہ انجام آتھم ص5،خزائن ج11ص289)
    9.میں نبی ہوں اس امت میں۔(حقیقت الوحی ص391, خزائن ج22ص406.
    10.مجھے الہام ہوا ہے لوگو میں تم سب کی طرف رسول ہو کر آیا ہوں۔(حقیقت الوحی ص163, خزائن ج22ص407)
    11.میرا منکر کافر ہے۔(حقیقت الوحی ص163, خزائن 22ص167)
    12.میرے منکروں بلکہ متاملوں کے پیچھے بھی نماز جائز نہیں ۔(فتاویٰ احمدیہ ج اول ص18).

  3. مرزا صاحب آپ کواللہ سبحانہ وتعالی کی قسم دے کر کہتا ھوں کہ جن عبا رتوں کو آپ نے لوگوں کے سامنے مخالفین احمدیت کی کتابوں میں سے پڑھ کر لوگوں کو گمراہ کرنے کی کوشش کی ہے اگر آپ کے اندر ذرا سا بھی تقوی ھے تو مرزا صاحب کی جن کتابوں کے مخالفین کی طرف سے حوالے دئے گئے ہیں ان حالوں کی اصل کتابیں کھول کر خود ان عبارتوں کو بغور پڑھیں آپ پر حق واضع ھو جائیگا اور ان مخالفین احمدیت کے جھوٹ بھی آپ پر عیاں ھو جائیں گے شکریہ۔

  4. ۔ر،اس صاحب آپ مخالفوں کی تحریرات سے پڑھ کر آدھی عبارت سنا رہے ھیں ساری عبارت اصل کتا ب میں سے پڑھ کر سنائی پھر حقیقت واضح ھو جائے گی۔آدھی عبارت پڑھ کر منافرت نہ پھیلائں شکریہ یہ ساری عبارتیں ج۔اعت کے مخالفوں کی لکھی ھوئی ھیں۔

  5. ماشاءاللہ مرزا انجینئر صاحب آپ کی منافقت کو اسی طرح واضع ھونا چاھے شکریہ۔اور وہ گستاخی کا بھی اظہار کردیں شکریہ۔

  6. حضور صلی اللہ علیہ وسلم نے سچے مھدی جسے حضور نے ھمارا مھدی کہہ کر یاد فرمایا تھا، کی صداقت کی نشانی خوب واضح کردی ھوئی ھے۔
    اتنی واضح نشانی بتادی ھوئی ھے کہ کسی کا کوئی دائو پیچ اس سچے مھدی کی صداقت کو دھندلا ھی نہیں سکتا۔
    جو جتنا مرضی زور لگانا چاھے، لگا کر دیکھ لے
    ان لمھدینا آیتین ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
    والی اتنی واضح نشانی تو حضرت مرزا غلام احمد قادیانی علیہ السلام کے لئے اللہ تعالٰی ظاھر فرما چکا ہوا ھے۔کس میں طاقت ھے کہ اس نشان کو اب ریورس کرسکے ؟؟
    حضور کی بتائی ھوئی یہ پکی نشانی حضرت مسیح و مھدیء موعود علیہ السلام کے منکرین کو اپنے موقف میں غلط ثابت کرنے کے لئے بہت کافی ھے۔
    بہت کافی ھے،
    بہت کافی ھے۔
    لیکن جو شخص روز روشن کو بھی رات قرار دینے پر بضد ھو اسے اس کے حال پر چھوڑ دینا چاہئے۔ وہ اپنے کئے کا خود جوابدہ ھوگا۔
    ذرہ بتائیے تو سہی کہ
    ان لمھدینا آیتین والے نشان نے حضرت مسیح و مھدیء موعود کے مخالفین کے سارے دلائل اٹھا کر خود انکے منہ پر نہیں دے مارے ؟
    سچے مھدی کی پہچان کے لئے اس آسمانی نشان میں خوب کھول کر بتادیا گیا تھا کہ
    معین کردہ ایک خاص مہینہ میں یعنی رمضان کے مہینہ میں
    1- چاند کو بھی گرھن لگے گا
    اور
    2- سورج کو بھی گرھن لگے گا
    سال کے بارہ مہینوں میں سے کسی اور مہینے میں نہیں بلکہ صرف اور صرف رمضان کے مہینہ میں یہ دونوں گرھن لگیں گے
    اور گرھن لگنے کے معین دن بھی پہلے سے بتا دئے گئے تھے۔
    جب یہ آسمانی نشان لوگوں نے دیکھا تو سعید فطرت لوگوں نے اس نشان سے سچے مھدی کو پہچان لیا لیکن ایسے بھی اپنی ضد کے پکے تھے جنہوں نے کہا کہ بتایا گیا نشان تو بیشک ظاھر ھوگیا ھے لیکن اس نشان کو دیکھ کر حضرت مرزا غلام احمد قادیانی پر جو لوگ ایمان لائیں گے وہ ھمارے نزدیک گمراہ ھوجائیں گے۔
    انا للہ وانا الیہ راجعون انا للہ وانا الیہ راجعون
    یہ حال ھو جن لوگوں کا انکی قسمت میں مسیح و مھدی بھلا کیسے ھوسکتے ھیں؟؟؟
    کیسے ھو سکتے ھیں؟
    کیسے ھوسکتے ھیں؟
    ایسے منکرین کی قسمت میں یہودیوں کی طرح دیوار گریہ پر رونا لکھا جا چکا ھے۔
    چلئے اپنے معنوی بھائیوں کے پاس چلکر بیٹھیئے جو رورو کر دوھزار بائیس سال سے یہ دعا کرتے چلے آرھے ھیں کہ
    اے خدا مسیح کو بھیج
    اے خدا مسیح کو بھیج
    عیسٰی تو کب کا آکر جاچکا اور عیسٰی پر ایمان لانے والے فتح اور غلبہ پاگئے لیکن عیسٰی کے منکر یہودی یہی رٹ لگا رھے ھیں کہ
    اے خدا مسیح کو بھیج
    اے خدا مسیح کو بھیج

  7. آپ لوگ غلط فہمی سے احمدی مسلمانوں کو بھٹکا ہوا اور مرتد تو کہہ دیتے ھو لیکن آپ کو پتہ ضرور چل چکا ھے کہ مولوی اور مفتی احمدیوں کو جو بھی کہیں احمدی ھیں ھم سے زیادہ اچھے مسلمان۔
    کبھی نہ کبھی تو آپ کا ضمیر جاگے گا اور آپ کو مجبور کرے گا کہ احمدی اسلام ھی حضورﷺ والا سچا اسلام ھے۔

  8. ڈاکٹر اسرار صاحب کا ایک لیکچر سن رھا تھا کہ حضورﷺ کی مخالفت میں تین قسم کے کردار سامنے آئے تھے۔
    ایک گالیاں دینے والے اور بداخلاق لوگ جن کا سردار حضور ﷺ کا چچا ابولہب تھا
    دوسرے وہ لوگ جو اپنے باپ دادا کے دین کو سچا سمجھتے تھے اور کہتے تھے کہ حضور ﷺ نے آکر ھمارے درمیان تفرقہ پیدا کردیا ھے ان کا سردار ابوجہل تھا۔
    جبکہ تیسری قسم کے لوگ وہ تھے جو حضورﷺ کو اچھا سمجھتے تھے لیکن معاشرے کی مخالفت مول نہیں لینا چاھتے تھے اور اپنے مفادات اور دوستیاں اور چوھدراھٹ نہیں چھوڑنا چاھتے تھے۔
    حیرت ھے یہ سب کچھ جانتے ھوئے بھی ڈاکٹر اسرار نے حضرت مسیح و مھدی موعود علیہ السلام کا انکار کیوں کیا ؟
    ڈاکٹر اسرار اپنے لیکچر میں سامعین کو بتا رھے تھے کہ حضورﷺ کو اپنے دعوی نبوت کے پہلے تین سال ھلکی پھلکی شخصی اور ذاتی مخالفت کا سامنا کرنا پڑا تھا لیکن جب مکہ کے سرداروں نے دیکھا کہ نوجوان طبقہ اور غلام طبقہ حضورﷺ کی طرف متوجہ ھورھا ھے تو انہوں نے جسمانی طور پر ٹارچر کرنا شروع کردیا۔
    اور پھر جب یہ محسوس کیا کہ حضورﷺ کی دعوت آگے چل کر ایک بڑی تحریک بن جائے گی۔ جسے ھم مشت غبار سمجھے تھے وہ تو آندھی بنکر ھمیں ھی اڑا لے جائے گی۔ تو انہوں نے حضورﷺ کو جان سے مار کر ختم کردینے کی کوششیں شروع کردیں۔
    حضور ﷺ کو جسمانی ایذاء پہنچانے کی انتہا طائف میں نظر آتی ھے جب وھاں کے آوارہ اور اوباش چھوکروں کے ذریعے پتھرائو کرکے حضورﷺ کو لہو لہان کردیا گیا۔
    خانہ کعبہ میں حضورﷺ پر اونٹ کی اوجھڑی ڈالی گئی۔ اور پٹکا ڈال کر گلہ گھونٹنے کی کوشش کی گئی۔
    کائنات کے سب سے عظیم نبی کے ساتھ لوگوں کا سلوک ھمارے سامنے ھے۔
    اس تناظر میں دیکھیں تو ڈاکٹر اسرار کی مخالفت ابوجہل والی مخالفت معلوم ھوتی ھے اور یوٹیوب پر حضرت بانی جماعت احمدیہ کو برا بھلا کہنے والے اور ان پر طعن و تشنیع کے پتھر برسانے والے لوگ ابولہب اور طائف کے اوباش لوگوں کا کردار ادا کر رھے ھیں۔
    جبکہ کچھ لوگ احمدی مسلمانوں کو اچھا سمجھتے ھیں مگر سچ کہنے کی ھمت نہیں پاتے۔
    جب ان تین قسم کے بولہبی اور بوجہلی کرداروں نے دیکھا کہ اب یہ جماعت ایک وسیع تحریک بنے لگی ھے اور تشویشناک حد تک قبولیت حاصل کرنے لگی ھے
    تو انہوں نے جماعت احمدیہ کا رستہ روکنے کے لئے نئے سے نئے حربے آزمانے شروع کردئے۔ لیکن بھول گئے کہ قرآن کریم میں حضورﷺ اور دیگر انبیاء کے حالات صاف بتاتے ھیں کہ اللہ تعالیٰ جس کو اپنا مرسل یا خلیفہ بناکر بھیجتا ھے انجامکار وہ اور اس کے ماننے والے ضرور غالب آکر رھتے ھیں خواہ اس پر دو تین صدیاں ھی کیوں نہ لگ جائیں۔

  9. اللہ تعالٰی نے قرآن مجید میں فرمایا ہوا ھے
    پس لعنت ھو ایسی قوم پر جو ایمان نہیں لاتے
    آپ
    ختم اللہ علی قلوبھم و علی سمعھم و علی ابصارھم غشاوہ ۔۔۔۔۔۔
    کی ایک زندہ اور جیتی جاگتی مثال ھو۔
    اللہ تعالٰی نے قرآن مجید میں سابقہ مرسلین اور ان کے منکرین اور مکفرین کا بار بار اور کھول کھول کر ذکر فرمایا ہوا ھے
    لیکن آپ ایسے ھٹ دھرم ھو کہ سب کچھ دیکھ کر بھی ما وجدنا علیہ آبائنا
    کے ساتھ چمٹے رھنے پر مصر ھو۔
    اس کا نتیجہ
    من کان فی ھاذہ اعمی فھو فی الآخرت اعمی
    کے سوا اور کیا ھوگا ؟
     اللہ تعالٰی نے قرآن حکیم میں صاف صاف اور کھول کھول کر واضح فرمایا ھے کہ :
    اسی طرح ان سے پہلے لوگوں کی طرف بھی کبھی کوئی مرسل نہیں آیا مگر انہوں نے کہا کہ یہ ایک جادوگر یا دیوانہ ھے۔
    کیا اسی کی وہ ایک دوسرے کو نصیحت کرتے ھیں بلکہ یہ ایک سرکش قوم ھیں۔
    پس ان سے منہ پھیر لے، تو ھرگز کسی ملامت کا سزاوار نہیں۔
    (الذاریات 53-54-55)

    اور رسولوں سے تجھ سے پہلے بھی تمسخر کیا گیا۔
    پس ان کو جنہوں نے تمسخر کیا انہی باتوں نے گھیر لیا جن سے وہ تمسخر کیا کرتے تھے۔
    تو کہہ دے کون ھے جو رات کو اور دن کو تمہیں رحمان کی گرفت سے بچا سکتا ھے۔ بلکہ وہ تو اپنے رب کے ذکر سے ھی منہ موڑے بیٹھے ھیں۔
    ( الانبیآء 41-42)

    یہ محض ایک ایسا شخص ھے جس نے اللہ پر جھوٹ گھڑا ھے اور ھم اس پر ایمان لانے والے نہیں۔
    اس نے کہا اے میرے رب میری نصرت کر کیونکہ انہوں نے مجھے جھٹلا دیا ھے۔
    اس نے کہا تھوڑی دیر میں ھی وہ ضرور پشیمان ھو جائیں گے۔
    پس ان کو ایک گرجدار آواز نے حق کے ساتھ آ پکڑا اور ھم نے انہیں کوڑا کرکٹ بنا دیا۔ پس لعنت ھو ظالم قوم پر۔
    پھر ھم نے ان کے بعد دوسرے زمانہ والوں کو پیدا کیا۔
    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
    ۔۔۔۔۔۔۔
    پھر ھم نے اپنے رسول پے درپے بھیجے۔جب بھی کسی امت کی طرف اس کا رسول آیا تو انہوں نے اسے جھٹلا دیا۔
    پس ھم ان میں سے بعض کو بعض دوسروں کے پیچھے لائے پھر ھم نے انہیں قصے کہانیاں بنا دیا۔ پس لعنت ھو ایسی قوم پر جو ایمان نہیں لاتے۔
    (المومنون -40-44)

    آپ جیسی سرشت رکھنے والے لوگ اللہ تعالٰی کی طرف سے باربار بیان کئے ھوئے سابقہ منکرین کے حالات سن کر بھی اللہ تعالٰی کی کی نصائح سے
    یہ کہہ کر منہ پھیر لیتے رھے ھیں کہ
    تلک اساطیر الاولین

    پس لعنت ھو ایسی قوم پر جو ایمان نہیں لاتے۔

  10. Kya koi shakhs Allah ko chhor kr sach hussaini ho sakta he?kya koi shakhs Allah k ilawa kisi SE madad mange chahe wo anmbiya karaam hi kyun na hon wo shakhs haq per ho sakta he ? Hazrat Imaam Hussain Ra ko shaheed krne wale bhi ap log aur un se dhoka krne wale bhi ap k abao ajdaad aur ab ap certified Muslims bane baithe ho ? Hazrat Mirza Ghulami Ahmad Qadiyani as ne tu ye farmaya he k agr koi shakhs Hazrat Imaam Hussain Ra k bare mein zra bhi shak rakhe wo apni akhrat ki fikr kre . Jo baat Shia ko mukhatib kr k ho rahi wo un k muamlaat ki wja se ho rahi he jab koi Allah k muqable mein kisi ko laye ga tu .

  11. یہ محض میرے کومینٹس نہیں تھے بلکہ تمہیں اور تم جیسی سوچ رکھنے والوں کے سامنے اپنا عقیدہ صاف لفظوں میں گوش گزار کرنا پیش نظر تھا۔
    یعنی یہ کہ میں حضرت مرزا غلام احمد قادیانی علیہ الصلوات والسلام کو حضور صلی اللہ علیہ وسلم کی بشارتوں کے مطابق سچا خلیفت اللہ المھدی اور مسیح موعود دل کی گہرائی سے یقین کرتا ہوں۔
    اور آپ علیہ السلام پر ایمان لانے کو اپنی زندگی کی سب سے بڑی سعادت سمجھتا ہوں۔ کیونکہ آپ علیہ السلام کے ذریعے ہم نے اس حقیقی اسلام کو پایا جس پر حضور صلی اللہ علیہ وسلم عمل پیرا تھے۔
    ہم اور ہماری نسلیں اس خلیفتہ اللہ المھدی کے اس احسان کا بدلہ کبھی بھی ادا نہیں کرسکتیں کہ انہوں نے ہمارا تعلق اسلام کے زندہ اور کلام کرنے والے خدا سے قائم کردیا اور اپنے آقا و مطاع حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم کی لازوال محبت ہمارے دلوں اور ہماری جان اور ہماری روح میں بھر دی۔
    میں خلیفة اللہ المہدی اور مثیل عیسٰی نبی اللہ کے تم جیسے منکرین و مکفرین کو سخت بد نصیب اور گمراہ یقین کرتا ہوں۔
    صرف یہی نہیں بلکہ میں تم لوگوں کو حضور صلی اللہ علیہ وسلم کے واضح حکم کا منکر اور مکفر بھی سمجھتا ہوں۔ حضور صلی اللہ علیہ وسلم نے اپنی امت کو واضح اور صاف لفظوں میں حکم دیا تھا کہ
    مہدی خلیفة اللہ ہوں گے یعنی زمین پر اللہ کے خلیفہ اور اللہ کے نمائندہ ہوں گے۔ ان تک پہنچنا اور ان کو میرا سلام پہنچانا اور ان کی بیعت کرنا۔
    تم نے چونکہ حضور صلی اللہ علیہ وسلم کے اس واضح حکم کی نافرمانی اور بے ادبی کی ہے اس لئے میں تم جیسے حضور کے نافرمانوں اور گستاخوں سے بیزاری کا اظہار کرتا ہوں۔
    اور اس تناظر میں یہ بھی یقین رکھتا ہوں کہ تم لوگ جو اللہ کے بھیجے ہوئے خلیفتہ اللہ المھدی کے منکر اور اس کے کافر ہو، تم نے خود کو ان سابقہ کفار اور منکرین کی صف میں شامل کر لیا ہے جو اس سے پہلے گزر چکے۔جن کے متعلق اللہ تعالٰی نےقرآن مجید میں بہت تفصیل کے ساتھ اور بار بار ذکر کیا ہوا ہے۔
    تمہارے ساتھ اب تک جو بات کی اس کا مقصد اپنے عقیدہ کا واضح لفظوں میں کھول کر اظہار کرنا تھا۔ تاکہ تم سنی سنائی باتوں پر بناء کرکے ہمارے عقائد کے متعلق بولے جانے والے جھوٹ اور سچ سے براہ راست آگاہ ہو سکو۔
    کوشش کی ہے کہ اپنا عقیدہ اور اپنا موقف پوری طرح تمہارے سامنے رکھ کر اپنے فرض سے سبکدوش ہوں۔
    وما علینا الا البلاغ المبین
    ربنا افتح بیننا و بین قومنا بالحق و انت خیرالفاتحین۔

Back to top button